وزیر اعظم عمران خان نے پاکستان میں تعمیراتی شعبے سے متعلق بے مثال فیصلہ لیا۔

اسلام آباد – وزیر اعظم عمران خان نے پاکستان میں تعمیراتی شعبے کی تعمیر کے حوالے سے غیرمعمولی فیصلہ لیا کیونکہ انہوں نے کاروبار میں آسانی کے لئے آسان قوانین اور حکمرانی کے ساتھ پاکستان میں تعمیراتی شعبے کو ایک صنعت بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیر اعظم عمران خان نے تعمیراتی شعبے کو صنعت قرار دینے کی اصولی منظوری دے دی ہے۔ وہ آج اسلام آباد میں تعمیراتی شعبے میں آسانی کے ساتھ کاروبار سے متعلق اجلاس کی صدارت کررہے تھے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ حکومت تعمیر سے متعلق قوانین کو آسان بنانے اور غیر ضروری منظوریوں اور این او سی کی شرط کو ختم کرنے پر خصوصی زور دے رہی ہے۔

عمران خان نے بتایا کہ حکومت نے بڑے شہروں میں کثیر المنزلہ عمارتوں کی تعمیر کے لئے سول ایوی ایشن اور دیگر تنظیموں سے منظوری لینے کی شرط کو پہلے ہی ختم کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لینڈ کورٹ کے قیام سے اراضی سے متعلق امور کو حل کرنے میں بھی بہت آگے جانا ہوگا۔

چیئرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی انور علی ہائڈر نے وزیر اعظم کو پالیسی امور کو حل کرنے کے لئے اٹھائے جانے والے اقدامات ، طریقہ کار کو آسان بنانے ، غیر ضروری منظوریوں کے خاتمے ، زوننگ اور ترقیاتی ضمنی قوانین اور دیگر متعلقہ امور سے آگاہ کیا۔

انہوں نے تعمیراتی شعبے میں آسانی کے ساتھ کاروبار کو بہتر بنانے کے لئے مختصر ، درمیانے اور طویل مدتی روڈ میپ پیش کیا۔ انہوں نے کہا کہ تعمیراتی صنعت میں شفافیت کو یقینی بنانے اور طریقہ کار کو آسان بنانے کے لئے جدید ترین ٹیکنالوجی متعارف کروائی جارہی ہے۔

چیئرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی نے کہا کہ پہلے مرحلے میں بڑے شہروں میں اراضی کا ریکارڈ ڈیجیٹل بنایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ طویل مدتی منصوبے کے تحت پورے ملک میں اراضی کے ریکارڈ کو ڈیجیٹل بنایا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ یہ عمل اراضی کے ریکارڈ کی آن لائن دستیابی کو یقینی بنائے گا اور زمین سے متعلق بیشتر معاملات کو حل کرے گا۔

چیئرمین سی ڈی اے نے وزیراعظم کو وفاقی دارالحکومت میں شروع کیے جانے والے خودکار کلائنٹ سروس سینٹر کے بارے میں آگاہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس خدمت کے تعارف سے وفاقی دارالحکومت کے رہائشیوں کو سی ڈی اے سے متعلق امور کے سلسلے میں آسانی ہوگی اور بدعنوانی اور دیگر غیر قانونی طریقوں کو روکنے میں مدد ملے گی۔

Farukh Tariq

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *